بین الاقوامی

حزب اللہ کی ریلی کے قریب فائرنگ میں 6 افراد ہلاک لبنان کے درالحکموت بیروت میں

قصر العدل کے سامنے مظاہرین کی ریلی کے قریب فائرنگ کی ۔ جس کے نتیجے میں 6 افراد ہلاک۔ اور 30 زخمی ۔یہ واقعہ لبنانی دارالحکومت بیروت میں پیش آیا

ریلی کا انعقاد ۔امل تحریک اور حزب اللہ کی جانب سے کیا گیا تھا ۔ ریلی کے دوران قصر العدل کے سامنے جمع ہو کر شرکاء گزشتہ سال بیروت کی بندرگاہ پر ہونے والی دھماکے ۔ کی تحقیق کرنے والی ٹیم کے سربراہ جج تاریک بطر ۔ پر الزام عائد کرتے ہوئے۔ ان کی برطرفی کا مطالبہ کر رہے تھے۔
اس مقام پر کچھ فاصلے سے ہونے والی فائرنگ کی وجہ سے ۔ اور آوازوں سے مظاہرین منتشر ہوگئے۔ جس کے بعد علاقے کے اندر مظاہرین اور حکومت کے حامیوں کے درمیان تصادم شروع ہو گیا۔ جو کئی گھنٹے جاری رہا ۔ ابھی تک فائرنگ کرنے والے افراد کی شناخت نہیں ہوسکی۔ چناچہ فوج نے قصر العدال اور ارد گرد کے علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے۔ اور فائرنگ میں ملوث افراد کی تلاش شروع کر دی ہے۔

لبنانی وزیر اعظم نجیب میقاتی ۔نے امن کو بحال کرنے اور ایسی پر تشدد کارروائیوں میں ملوث افراد کے خلاف سخت کارروائی کا حکم دے دیا ہیں۔ جبکہ لبنانی فوج کے سربراہ سحیر گیگا نے اس افسوسناک واقعے کی مذمت کی ہے۔ مگر حسب اللہ اورامل کی جانب سے ان پر عائد کیے گئے الزامات کا جواب نہیں دیا گیا۔

مزید ان کا کہنا ہے۔ کہ بڑے پیمانے پر ہتھیاروں کے استعمال سے شہریوں کی جان کو خطرہ مزید بڑھ گیا ہے۔ اس پر مزید انہوں نے کہا۔ کہ یہ دو جماعتوں کے درمیان جنگ لگ رہی ہے۔ کچھ دیر پہلے ہم اس علاقے میں داخل نہیں ہو سکتے تھے۔ کیونکہ راکٹ اور بم دھماکوں اور فائرنگ کی آوازیں آ رہی تھیں۔ تاہم لبنانی فوج کے کنٹرول کے بعد صورتحال میں تھوڑی بہتری آئی ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button