پاکستان

‏قائدِ اعظم محمد علی جناح کی حیات ایک نظر میں

‏قائدِ اعظم محمد علی جناح کی حیات ایک نظر میں
پردادا: میگھ جی
دادا: پونجا بھائی
والد: جناح پونجا
والدہ: مٹھی/شیریں بائی
کاسٹ:شیخ
پیدائش: 25 دسمبر 1876 اتوار
جائے پیدائش: کراچی (کھارادر)
تعداد بہن بھائی: 4بہنیں +2بھائی(محمد علی سب سے بڑے)
عقیقہ: پانیلی درگاہ پہ 5 ماہ کی عمر میں کیا
میٹرک: 1892سندھ مدرسۃ لاسلام(16سال کی عمر میں)
بیرسٹر: 1896لندن(20 سال کی عمر میں)
پاسپورٹ کا اجراء: 4 جولائی1936
پاسپورٹ نمبر: 400878
*ازدواجی زندگی*
پارسی مذہب کے امیر ماں باپ کی بیٹی سے ہوئی
مریم کی پیدائش: 20 فروری 1900
قبولِ اسلام: 18 اپریل 1918 جمعرات
(رتی قبولِ اسلام کر کے خاندان اور ساری جائیداد جناح کی خاطر در کر دی)
شادی: 19 اپریل 1918 جمعہ
(رتی مریم سے مریم جناح ہوئیں)
نکاح خوان: مولانا نظام احمد نقشبندی
نکاح نامہ: فارسی زبان میں لکھا
نکاح رجسٹرار: مولانا حسن نجفی
مقامِ نکاح: ساؤتھ کورٹ ماؤنٹ بمبئ
حق مہر: 1000 روپے
گفٹ: 125000 روپے
گواہ مریم: حاجی شیخ ابو القاسم نجفی
گواہ جناح: راجہ محمد علی خان
انگوٹھی برائے مریم جناح: راجہ محمد علی خان نے ہیرے کی انگوٹھی تحفے میں دی
گھریلو ملازم جناح: وسن
بیٹی کی پیدائش: 14 اگست 1919
بیٹی کا نام: دینا جناح
وفات مریم جناح: 20 فروری 1929 (بوجہ کینسر)
تدفین: 22 فروری 1929
قبرستان: آرام باغ بمبئ
کانگرس میں شمولیت: 1906
مسلم لیگ میں شمولیت: 1913
کانگرس سے علیحدگی:1920
مسلم لیگ کا نعرہ:
*”مسلم ہے تو مسلم لیگ میں آ”
1938 سے محمد علی جناح بیمار رہنے لگے
سب سے پہلے مولانا مظہرالدین نے جناح کو قائدِ اعظم کا لقب دیا
1940 کو قراردادِ پاکستان منظور ہوئی اس میں قائدِ اعظم نے 1 گھنٹہ 40 منٹ خطاب کیا
لاکھوں قربانیوں کے بعد قائدِاعظم اور دیگر رہنماؤں کی ان تھک محنت کے نتیجے میں 27 رمضان بمطابق 14 اگست 1947 براز جمعہ پاکستان دنیا کے نقشے پر ابھرا
جھنڈا سلائی: امیر الدین قدوائی
اسبلی میں منظوری: 11 اگست 1947
پہلی پرچم کشائی:14-13 اگست کی درمیانی شب 12 بجے
گورنر جنرل: 15 اگست 1947
حلف برداری: چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ
قرانِ مجید انگلش ترجمہ زیرِ مطالعہ رکھتے سورۃ الفیل کثرت سے مطالعہ کرتے
بیماری کی وجوہات:
1-وقت پہ کھانا نہ کھانا
2-کثرتِ سیگریٹ نوشی
3-جلسے جلوس کی کثرت
ڈاکٹرز:
1-کرنل الٰہی بخش
2-ڈاکٹر ریاض علی شاہ
3-ڈاکٹر ایس-ایس عالم
بیماری کی تشخیص: پیلوریسی
قد: 5 فٹ 10.5 انچ
وزن: صرف 70 پاؤنڈ رِہ گیا تھا.
حلوہ پوری نہایت پسند تھی
سیگریٹ: سُگار+ کارواں
قائد اعظم کے آخری الفاظ:
آئین…. میں اسے جلدی…. مکمل کروں گا…. مہاجرین…. انہیں ممکن…. امداد دیجئے…. پاکستان….
(پھر فاطمہ جناح کو اشارہ کر کے اپنے پاس بلایا اور کہا)
فاطی…. خدا حافظ…. لاالٰہ الاللّٰہ محمدالرسول اللّٰہ
وفات: 11 ستمبر 1948 ہفتہ رات 10:25 کراچی
جنازہ: 12 ستمبر 1948 اتوار دوپہر 2:30
جنازہ و تدفین: پرانی نمائش گاہ
قبر کی کھدائی: یوسف ہارون اور ساتھی
نمازِ جنازہ: مولانا شبیر احمد عثمانی
کل عمر: 71 سال 8 ماہ 4 دن
پاکستان بننے کے بعد 1 سال 27 دن زندہ رہے
جنازے میں شرکاء: 5 لاکھ سے زائد
*انسانی تاریخ میں پاکستان واحد ایسا ملک ہے جو فوج کی مدد کے بغیر معرضِ وجود میں آیا فوج کے بغیر قوم کو مستحکم کیا اور پاکستان قائم کر کے دکھایا*
ہو اگر خود نگرو خود گرو خود گیر خودی
یہ بھی ممکن ہے کہ تو موت سے بھی مر نہ سکے
محمد حنظلہ شاہد

اردو گلوبلی

اردو گلوبلی پاکستانی اردو نیوز ویب سائٹ ہے جہاں آپ کو ہر خبر تک بروقت رسائی ملے گی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button