بلاگزکھیل

ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ اور پاکستان کے امکانات

عنوان: ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ اور پاکستان کے امکانات
‏کرکٹ کے مختصر ترین فارمیٹ کا رنگا رنگ میلہ 17 اکتوبر سے اومان اور متحدہ عرب امارات میں شروع ہو رہا ہے۔ اور اس کے لیے شریک ٹیموں نے تیاریاں شروع کر دی ہیں۔پاکستان کی کرکٹ ٹیم کی ورلڈ کپ تیاریوں کے سلسلے میں نیوزی لینڈ اور انگلینڈ کا دورہ انتہائی اہمیت کا حامل تھا لیکن عین وقت پہ نیوزی لینڈ نے دروہ پاکستان اس وقت ختم کر دیا جس وقت کہ میچ شروع ہونے میں کچھ وقت باقی تھا۔اسی طرح انگلینڈ بورڈ نے بھی نیوزی لینڈ کی دیکھا دیکھی اپنا دورہ پاکستان منسوخ کر دیا۔ اس دورہ کی منسوخی کی وجہ سے پاکستان کرکٹ بورڈ کو جہاں لاکھوں ڈالرز کا نقصان برداشت کرنا پڑا وہاں ورلڈ کپ کی تیاریوں کو بھی بڑا دھچکہ پہنچا اس ضمن میں نیشنل ٹی ٹونٹی میچز کی اہمیت اور بھی بڑھ گئی تھی اس وجہ سے ورلڈ کپ کی اعلان کردہ ٹیم کے تقریباً تمام کھلاڑیوں نے بھرپور شرکت کی۔ خیبرپختونخواہ کی ٹیم نے نیشنل ٹی ٹونٹی میں اپنے اعزاز کا کامیابی کے ساتھ دفاع کیا۔پاکستان کی کرکٹ ٹیم کا اعلان کر دیا گیا ہے۔ پاکستان کی ٹیم کے باؤلنگ کوچ فلینڈر بھی پاکستان پہنچ چکے ہیں اور ان کی نگرانی میں پاکستانی پیس بیٹری ان دنوں بھرپور پریکٹس کر رہی ہے۔ سابق آسٹریلوی اوپنر میتھیو ہیڈن پاکستان ٹیم کو متحدہ عرب امارات میں جوائن کریں گے۔ امید ہے کہ میتھیو ہیڈن اس نئی زمہ داری کو بخوبی انجام دیں گے۔ پاکستان کی ٹیم ایک متوازن ٹیم دکھائ دے رہی ہے۔ایک اچھا کمبینیشن قومی ٹیم کو فائنل فور میں آسانی سے جگہ دلا سکتا ہے۔اگر بیٹنگ کو دیکھا جائے تو اس میں بابر اعظم اور محمد رضوان اوپننگ میں تباہ کن ثابت ہو سکتے ہیںاسی طرح مڈل آرڈر میں حیدر علی بڑی ہٹ لگانے میں شہرت رکھتے ہیںاس کے بعد محمد حفیظ اور شعیب ملک کے تجربے اور صلاحیتوں کا امتحان ہو گا۔ممکنہ طور پر یہ ورلڈ کپ دونوں سینیرز کے کیریئر کا آخری ورلڈ کپ ہو گا۔اگر باؤلنگ کی بات کی جائے تو فاسٹ باؤلرز میں شاہین شاہ آفریدی ، حسن علی اور حارث رؤف کی صلاحیتیں کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہیں۔ ان کے ساتھ ساتھ سپنرز میں شاداب اور عماد وسیم متحدہ عرب امارات کی پچزپر عمدہ کارکردگی دکھا سکتے ہیں اس کے ساتھ ساتھ یہ دونوں آخری اوورز میں اچھی ہٹنگ بھی کر سکتے ہیںپاکستان کے اہم میچز میں روایتی حریف بھارت تو تھا ہی لیکن اب دورہ پاکستان منسوخ کرنے کی وجہ سے اب نیوزی لینڈ بھی پاکستان کے نشانے پہ آ چکا ہے۔پاکستان کی کرکٹ ٹیم نےاگر بے خوف ہو کرکٹ کھیلی تو امید ہے کہ پاکستان کی کرکٹ ٹیم بڑی ٹیموں کو پچھاڑنے میں کامیاب ہو جائے گی

تحریر اسد طاہر

اردو گلوبلی

اردو گلوبلی پاکستانی اردو نیوز ویب سائٹ ہے جہاں آپ کو ہر خبر تک بروقت رسائی ملے گی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button