سائنس و ٹیکنالوجی

سائنس کا بڑا منصوبہ خلائی دوربین میشن 30 برسوں میں تیار

۔ جہاں سے وہ کائنات کے ان حصوں کو دیکھنے کی کوشش کرے گی

جیمز ٹیلی سکوپ کو مدار میں بھیجنے کے لیے تیاری کرنا شروع کر دی گی

جیمز ٹیلی سکوپ جو دس ارب ڈالر کی لاگت سے تیار ہوئی ہے فرینچ گیانا سے 18 دسمبر کو مدار میں روانہ کیا جائے گا۔ جیمز ویب سپیس ٹیلی سکوپ ہبل ٹیلی اسکوپ کی جگہ کام کرے گی۔ جس کو انیس سو نوے میں ناسا نے خلا میں روانہ کیا تھا ۔ یہ تاریخ کا پہلا موقع تھا ۔کہ ایک ٹیلی سکوپ خلا کو مشن پر روانہ کیا گیا تھا۔ واضح رہے کہ۔ جیمز ویب سپیس ٹیلی سکوپ جسے امریکہ میں تیار کیا گیا ہے۔ کنڑیر سے اتار کر سیدھا کھڑا کر دیا گیا ہے لیکن خلا میں بھیجنے سے پہلے اس کی کی مکمل چیکنگ کی جائے گی۔ یہ اکیسویں صدی کا سب سے بڑا منصوبہ ہے۔ اور اسے آریان فاہیو راکٹ زمین سے خلاء میں چھوڑے گا ۔ جہاں سے وہ کائنات کے ان حصوں کو دیکھنے کی کوشش کرے گی ۔ جہاں ہبل ٹیلی سکوپ نہیں پہنچ پائی

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button