پاکستان

لاہور میں دوسال کے بچے سے زیادتی کے بعد قتل

اہور کی مقامی پولیس نے پاکپتن سے دوبارہ لاش لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے مردہ خانے منتقل کل کر دیا

ملزم اور اس کے تینوں اداروں کو حراست میں لے لیا گیا

لاہور کے علاقے ستو کللہ میں آئی پاکپتن سے کنیز ہ بی بی خاتون اپنے دو سالہ بیٹے علمدار کے ساتھ منہ بولے ماموں کے گھر ٹھہری ہوئی تھی وہ بچے گھر چھوڑ کر لوگوں کے گھروں میں کام کرتی تھی پولیس نے مقتول کی ماں کی مدعیت میں منہ بولے ماموں کے بیٹے علی شان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے بچی کی ماں کا کہنا ہے کہ کام سے واپسی پر گھر آہی تو بیٹے کو بے ہوشی کی حالت میں پایا اسپتال لے کر گی تو ڈاکڑ نے بیٹے کی موت کی تصدیق کر دی۔ بیٹے کی لاش کو دیکھ کر ملزمان نے منت سماجت کے بعد پاکپتن کے لیے روانہ کر دیا اور فرار ہوگئے والدہ گھر پاکپتن گی تو اہلخانہ نے لاش کو دیکھ کر بتایا کہ بچے کے ساتھ بدفعلی ہوئی ہے پاکپتن پولیس نے بچے کی لاش دیکھ کر لاہور پولیس کو آگاہ کیا اور لاہور کی مقامی پولیس نے پاکپتن سے دوبارہ لاش لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے مردہ خانے منتقل کل کر دیا

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button