بین الاقوامی

مرتے دم تک اشرف غنی نے لڑنے کا عہد کیا تھا مگر فرارہوگئے امریکی سیکرٹری انٹونی بلِنکن

اگلے ہی دن وہ افغانستان سے فرار ہو گئے

موت تک مقابلہ کریں گے طالبان کا ساتھ نہیں دیں گے اور اگلے ہی دن وہ فرارہوگئے امریکی سیکرٹری

رواں ہفتے کے آخر میں ایک امریکی تھنک ٹینک ہڈسن انسٹیٹیوٹ نے افغانستان میں کارروائیوں کے لیے پاکستانی فضائی حدود کے استعمال کے لیے ایک باضابطہ معاہدے پر ہونے والے امریکہ اور پاکستان مذاکرات کو اہم پیش رفت قرار دیا افغانستان کے لیے سابقہ امریکی سفیر زلمے خلیل زاد نے کہا کہ جو بائیڈن انتظامیہ کا بل میں حکومت کے خاتمے کو روکنے کے لیے مزید کچھ کر سکتی تھی جبکہ امریکی سیکرٹری انٹونی بلکن کا کہنا ہے کہ انہوں نے ذاتی طور پر اشرف غنی کو کابل میں رہنے کے لئے قائل کرنے کی کوشش کی تھی ہفتہ 14 اگست کی رات اشرف غنی سے فون پر بات بات کر رہے تھے اور کابل میں نئی حکومتوں کو اقتدار کی منتقلی کے منصوبے کو قبول کرنے کے لیے دباؤ ڈالا کہ یہ حکومت طالبان کی قیادت میں ہوتی اور اس میں افغان قیادت کے تمام ارکان شامل ھوتے نے انہون نے مزید کہا کہ اشرف غنی نے کہا ھےکہ وہ ایسا کرنے کو تیار ہے اگر طالبان ساتھ نہیں دیں گے تو موت تک ان کا مقابلہ کے لیے تیار ہے اور اگلے ہی دن وہ افغانستان سے فرار ہو گئے

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button